Yemen army killed 20 commander of Houthi militia in Al Bayda

صنعا: ( اے یو ایس )یمن کے وسطی صوبہ البیضاءمیں سرکاری فوج کے خلاف لڑائی میں ایران کی حمایت یافتہ حوثی ملیشیا کے 20 کمانڈر ہلاک ہوگئے ہیں۔

حوثی ملیشیا نے اتوار کو اپنے ان فوجی لیڈروں کی ہلاکت کی تصدیق کی ہے۔صوبہ البیضاءکے جنوب میں واقع ضلع الظاہر میں یمنی فوج اور حوثی جنگجوؤں کے درمیان گھمسان کی جنگ ہورہی ہے۔یمنی وزارت دفاع نے قبل ازیں ایک بیان میں کہا ہے کہ فوج نے الظاہر کے نواح میں مختلف مقامات پر ایران کے حمایت یافتہ جنگجو گروپ کے حملوں کو ناکام بنا دیا ہے اور اس لڑائی میں حوثیوں کا بھاری جانی اورمالی نقصان ہوا ہے۔

یمنی حکومت گذشتہ چند روز سے البیضا کے پڑوس میں واقع صوبوں کو محفوظ بنانے کے لیے کوشاں ہے جبکہ حوثی ملیشیا نے صوبہ مآرب اور الجوف میں یمنی فوج کے ٹھکانوں پرحملے جاری رکھے ہوئے ہیں۔وزارت دفاع نے ٹویٹرپر ایک ویڈیو بھی شیئر کی ہے،اس میں الجوف میں سرکاری فوج کی حوثیوں سے جھڑپیں دیکھی جاسکتی ہیں۔