Smart lockdowns and travel restrictions to be imposed in Pakistan for Eidul Azha

اسلام آباد:( اے یو ایس ) حکومت نے اعلان کیا ہے کہ کورونا کی تیزی سے پھیلنے والی قسم ‘ڈیلٹا’ کے کیس سامنے آنے کے بعد اس پر قابو پانے کے لیے بقر عید پر اسمارٹ لاک ڈاؤن لگایا جائے گا۔وزیرِ اعظم کے معاون خصوصی برائے صحت ڈاکٹر فیصل سلطان نے پیر کو اسلام آباد میں صحافیوں کو بریفنگ دیتے ہوئے خبردار کیا کہ ملک میں کرونا وائرس کی نئی اور خطرناک قسم ڈیلٹا وائرس کے اثرات سامنے آ رہے ہیں جس کے پیش نظر اسمارٹ لوک ڈاؤن اور سفری پابندیوں کو پھر سے نافذ کیا جائے گا۔ اور صرف انہی افرا د کو عید کی تعطیلات گھر جا کر منانے کے لیے سفر کی اجازت ان لوگوں کو ہی ملے گی جنہوں نے ٹیکہ لگوا لیا ہوگا۔

طبی ماہرین کے خیال میں کرونا وائرس کی نئی قسم سے پاکستان میں وبا کی چوتھی لہر زیادہ مہلک ثابت ہو سکتی ہے۔ لہٰذا کورونا وائرس قواعد و ضوابط کے مکمل نفاذ کو یقینی بنانے کے لیے فوج کے ساتھ غیر فوجی اداروں اور انتظامیہ کی مدد لی جائے گی۔ پاکستان میں حالیہ دنوں میں کرونا وائرس سے متاثرہ افراد کی شرح میں بتدریج اضافہ دیکھنا میں آیا ہے جب کہ پیر کو 1808 نئے مریض سامنے آئے ہیں۔وزارتِ صحت کے مطابق گزشتہ 24 گھنٹوں کے دوران ملک میں کرونا کے مثبت کیسز کی شرح 3.84 فی صد رہی۔

دریں اثنا اردو تہذیب کو موصول اطلاع کے مطابق لاک ڈاؤن کا نفاذ شروع ہو گیا ہے اور کراچی کے چار علاقوں گلبرک، نارتھ کراچی، لیاقت آباد اور نارتھ ناظم آباد میں 26 جولائی تک مائیکرو اسمارٹ لاک ڈاو¿ن نافذ کردیا گیا ہے۔واضح ہو کہ سرکاری اعدا و شمار کے مطابق چاروں ٹاؤنز میں 200 سے زائد کورونا وائرس کے مریض موجود ہیں۔ متاثرہ علاقوں میں آنے اور جانے والوں کو ماسک پہننا لازمی قرار دیا گیا ہے۔متاثرہ علاقوں کے لوگوں کی غیر ضروری نقل و حرکت پر پابندی ہوگی۔ جبکہ کاروباری سرگرمیوں، موٹرسائیکل ڈبل سواری اور اجتماعات پر پابندی ہوگی۔