China, Pakistan outline ‘joint action’ to align Afghanistan strategies

بیجنگ: چین اور پاکستان نے افغانستان کو دہشت گردی کا گڑھ بننے سے روکنے اور دہشت گرد قوتوں کو نکالنے کے لئے جنگ زدہ ملک میں مشترکہ آپریشن شروع کرنے کا فیصلہ کیا ہے۔ چین کی وزارت خارجہ کے دفتر سے اشاعت کے لیے جاری بیان کے مطابق یہ فیصلہ چین کے جنوب مغربی شہر چینگدو میں ہفتے کے روز پاکستانی وزیر خارجہ شاہ محمود قریشی اور ان کے چینی ہم منصب وانگ یی کے درمیان ملاقات کے دوران لیا گیا۔وزارت خارجہ کے ترجمان ڑا لیجیان نے یہاں صحافیوں کو بتایا کہ ملاقات کے دوران وانگ اور قریشی نے افغان معاملے پر مشترکہ کارروائی کرنے کا فیصلہ لیا ہے۔اس کے علاوہ چینی وزارت خارجہ کی ویب سائٹ پر شائع ایک پریس ریلیز میں کہا گیا ہے کہ وانگ نے قریشی کے ساتھ ہوئی ملاقات میں کہا کہ ہمسایہ ہونے کے ناطے افغانستان کی صورتحال کا براہ راست اثر چین اور پاکستان پر پڑے گا اسی لئے ضروری ہے کہ دونوں ممالک باہمی تعاون کو مستحکم کریں اور تبدیلی پر عمل کریں۔ پریس ریلیز کے مطابق ، قریشی کے دورہ چین کے دوران یہ ایک اہم ایجنڈا تھا۔