Taliban carrying out door-to-door manhunt, report says

کابل:طالبان کے قبضے کے بعد افغانستان کے حالات خراب ہوتے جا رہے ہیں۔ دارالحکومت کابل میں انٹر نیشنل ہوائی اڈے کی طرف جارہے لوگوں کو طالبان دہشت گردوں کی طرف سے اغوا کئے جانے کے درمیان طالبان کی درندگی کا ایک دل دہلا دینے و الی ویڈیو سا منے آئی ہے۔ یہ ویڈیو طالبان کے قبضے کے بعد کی ہے یا پہلے کی ، ا سکی بات تصدیق نہیں ہو سکی ہے۔ ایک رپورٹ کے مطابق افغانستان کے دارالحکومت کابل کے بین الاقوامی ہوائی اڈے پر جانے والے 150 افراد کو طالبان عسکریت پسندوں نے اغوا کر لیا ہے۔ اس میں سے بیشتر ہندوستانی شہری ہیں۔

مقامی میڈیا نے واقعے کی تصدیق کی ہے۔ ہندوستان اپنے لوگوں کو کابل سے نکالنے کی مہم میں مسلسل مصروف ہے۔ سوشل میڈیا پر وائرل ہونے والی ایک ویڈیو میں دیکھا جا سکتا ہے کہ طالبان دہشت گرد عوام کے سامنے کچھ لوگوں کو روک کر وحشیانہ طور پر پوچھ گچھ کر رہے ہیں اور جوابات ملنے کے بعد وہ گولیوں سے بھون رہے ہیں۔ ویڈیو میں یہ بھی دیکھا جا سکتا ہے کہ طالبان عسکریت پسند راستے گزرنے والی گاڑیوں کو زبردستی روک رہے ہیں اور جو ان کے احکامات پر عمل نہیں کرتے ان پر گولیاں برسائی جارہی ہیں۔ طالبان وہاں کھڑے لوگوں کو دھمکیاں دے رہا ہے اور لاشوں کے ڈھیر لگائے جا رہا ہے۔ طالبان حکومت کی بربریت کا اندازہ اس ویڈیو سے با آسانی لگایا جا سکتا ہے۔

واضح ہو کہ طالبان دنیا کو قائل کرنے کے لیے سخت محنت کر رہا ہے کہ وہ 20 سال بعد افغانستان میں دوبارہ اقتدار میں آنے کے بعد القاعدہ جیسے دہشت گرد گروہوں سے تعلقات توڑ لے گا اور انہیں دنیا کی پہچان کی ضرورت ہوگی۔ کابل پر قبضے کے بعد طالبان نے پہلی پریس کانفرنس میں کیے گئے سوالات کے جواب دئیے ، یہاں تک کہ انہوں نے خواتین اور انسانی حقوق کا احترام کرنے کا عزم کیا ، لیکن وہ علاقائی دہشت گرد گروہوں اور ان کے مستقبل کے ساتھ اپنے مضبوط تعلقات پر خاموش رہے تھے۔

قابل ذکر ہے کہ طالبان کا ہمیشہ سے دوہرا کردار رہا ہے۔ ایک طرف ، طالبان کی موجودہ قیادت دنیا کو بتا رہی ہے کہ وہ افغان سرزمین کو کسی تیسرے ملک کے خلاف استعمال نہیں ہونے دے گی ، جبکہ اقوام متحدہ کے نامزد دہشت گرد گروہ سنی پشتون (طالبان)کے القاعدہ اور جیش محمد کے ساتھ قریبی تعلقات ہیں۔ پاکستان میں واقع یہ دونوں عالمی دہشت گرد گروہ طالبان کے زیر انتظام افغانستان کے اندر اپنے کیڈر کو تربیت دینے اور اپنے مخالفین پر دہشت گردانہ حملے لئے محفوظ پناہ گاہوں کی تلاش میں ہیں۔ بتادیں کہ طالبان نے کھلے عام جہاد کو اپنا بنیادی اسلامی فریضہ قرار دیا ہے۔

https://www.punjabkesari.in/international/news/taliban-carrying-out-door-to-door-manhunt-shocking-video-reveal-1442238