Egypt's first post-Mubarak ruler, Hussein Tantawi, dies aged 85

قاہرہ :(اے یو ایس ) مصر کے سابق وزیر دفاع اور بعد از حسنی مبارک مصر کے پہلے حکمراں محمد حسین طنطاوی کئی ماہ تک بسر علالت پر رہنے کے بعد منگل کی صبح انتقال کر گئے، ان کی عمر 85 برس تھی۔مصری مسلح افواج نے سوشل میڈیا پر جاری اپنے ترجمان کی زبانی تعزیتی بیان میں سابق فوجی کمانڈر طنطاوی کی وفات پر گہرے دکھ کا اظہار کیا۔

طنطاوی کو کئی ماہ قبل صحت سے متعلق بحران کا سامنا کرنا پڑا تھا۔یاد رہے کہ سابق فوجی کمانڈر 31 اکتوبر 1935کو قاہرہ میں پیدا ہوئے۔ انہوں نے ملٹری کالج سے 1956 میں گریجویشن کیا۔ بعد ازاں 1971 اور 1982میں بھی عسکری اداروں سے اعلی تعلیم حاصل کی۔طنطاوی نے 1967 اور 1973کی جنگوں میں شرکت کی۔

یاد رہے کہ 11 فروری 2011 کو سابق مصری صد محمد حسنی مبارک کی معزولی کے بعد مسلح افواج کی کونسل کے سربراہ ہونے کی حیثیت سے طنطاوی نے ہی ملک کی سربراہی سنبھالی تھی۔وہ یکم جولائی 2012 تک ملک کے سربراہ رہے۔ بعد ازاں 12 اگست 2012 کو ا±س وقت کے صدر محمد مرسی نے ایک فیصلے کے ذریعے طنطاوی کو ان کے عسکری عہدے سے ریٹائر کر دیاتھا۔