Gujarat: DRI seizes 3,000 kg heroin worth Rs 20,000 crore sent by Taliban

نئی دہلی:(اے یو ایس ) ڈائریکٹوریٹ آف ریونیو انٹیلی جنس (ڈی آر آئی) نے طالبان کے ذریعہ ہندوستان بھیجی گئی منشیات کی اب تک کی سب سے بڑی کھیپ پکڑی ہے ۔ منشیات کی یہ کھیپ گجرات کے منڈرا بندرگاہ سے پکڑی گئی ہے۔ برآمد شدہ ہیروئن کی قیمت بین الاقوامی منڈی میں تقریبا 12 سے 15 ہزار کروڑ روپے ہے۔ منشیات کی یہ کھیپ افغانستان سے ایران کے راستے ہندستان لائی گئی تھی جو جہاز کے ذریعے کنٹینروں میں چھپائی گئی تھی۔

منشیات کی یہ کھیپ ڈی آر آئی کے ایک بڑے آپریشن کے بعد برآمد ہوئی ہے جو چار دن تک جاری رہا۔ اس معاملے میں کل 5 افراد کو گرفتار کیا گیا ہے ، جن میں سے کچھ افغان شہری بھی ہیں۔ڈی آر آئی کا یہ آپریشن ابھی جاری ہے۔ فارنسیک لیب کے ذریعے منشیات کی جانچ کی جا رہی ہے ۔ اس سے پہلے بھی افغانستان میں طالبان کے کہنے پر کروڑوں مالیت کی منشیات ہندوستان بھیجی جا چکی ہیں جن میں نارکو ٹیرر اینگل بھی شامل رہا ہے۔ایجنسی نے ایک بیان میں کہا کہ گجرات کے احمد آباد ، دہلی ، چنئی ، گاندھی دھام اور مانڈوی میں سرچ آپریشن کیے گئے۔

ڈی آر آئی نے کہا تھا کہ پورے معاملے میں افغان شہریوں کی مبینہ شمولیت بھی منظر عام پر آئی ہے۔افغانستان دنیا میں ہیروئن پیدا کرنے والا سب سے بڑا ملک ہے ، جو عالمی پیداوار کا 80-90 فیصد کے درمیان فراہم کرتا ہے۔ حالیہ برسوں میں افغانستان میں ہیروئن کی پیداوار میں تیزی سے اضافہ ہوا ہے ، جس سے اگست میں اقتدار میں واپس آئے طالبان کو فنڈ اکٹھا کرنے میں مدد ملی ہے ۔