Taliban occupying Afghan Human Rights Commision's offices in Kabul

کابل: افغانستان کے آزاد انسانی حقوق کمیشن (اے آئی ایچ آر سی)نے کہا کہ اس کے دفتر کی عمارتوںپر 15 اگست سے، جب سے کہ طالبان نے افغانستان کا کنٹرول سنبھالاہے، طالبان عسکریت پسندوں کاقبضہ ہے ،اور اس نے اقوام متحدہ کی انسانی حقوق کونسل پر زور دیا کہ وہ ایک آزاد ادارہ قائم کرے تاکہ افغانستان میں انسانی حقوق کی خلاف ورزیوں کی نگرانی کی جا سکے۔

دوسری جانب کابل کے عبوری میئر نے کہا ہے کہ ملک کے نئے طالبان حکمرانوں نے شہر کی کئی خواتین ملازمین کو گھروں میں رہنے کا حکم دیا ہے۔خواتین کو وہی کام کرنے کی اجازت ہے جو مرد نہیں کر سکتے۔یہ فیصلہ بیشتر خواتین کارکنوں کو کام پر واپس آنے سے روک دے گا اور یہ ایک اور علامت ہے کہ طالبان بشمول عوامی زندگی میں خواتین پر پابندیاں عائد کرنے سمیت اسلام کی سخت تشریح کو نافذ کر رہے ہیں، جبکہ ایک برداشت اور شمولیتی حکومت کا وعدہ کیا گیا تھا۔