Imran Khan would better suit for job at PCB instead of being PM: Pak’s Sindh Chief Minister

اسلام آباد: صوبہ سندھ کے وزیر اعلیٰ مراد علی شاہ نے پیر کو وزیر اعظم عمران خان کی جانب سے کالعدم تحریک لبیک پاکستان (ٹی ایل پی) کے کارکنوں کے احتجاج سے نمٹنے کے طریقے پر طنز کرتے ہوئے کہا کہ سیاست ان کے بس کی بات نہیں ہے، اس لیے یہ زیادہ مناسب ہے کہ وزیراعظم کا عہدہ چھوڑ کر پاکستان کرکٹ بورڈ کا صدر بننا اچھا ہے۔ یہ اطلاع میڈیا میں شائع خبروں میں دی گئی۔

جیو ٹی وی کی رپورٹ کے مطابق، اسلام آباد میں میڈیا سے خطاب کرتے ہوئے، شاہ نے کہا کہ ٹی ایل پی کے احتجاج کے معاملے کو سنبھالنے میں پاکستان حکومت کی ناکامی کی وجہ سے قیمتی جانیں ضائع ہوئیں۔ پندرہ دن قبل ہونے والی جھڑپوں کے بعد سے ٹی ایل پی کے 11 کارکنوں اور آٹھ پولیس اہلکاروں سمیت 19 افراد کی جان چلی گئی اور 300 سے زائد زخمی ہوئے تھے۔

عمران خان اور جنرل باجوہ کے درمیان کشیدگی برقرار، پاکستان میں بغاوت توٹل گئی مگر تنازعہ کیسے ختم ہوگا؟اپوزیشن جماعت پاکستان پیپلز پارٹی کے رکن شاہ نے کہا کہ پی ٹی آئی(پاکستان تحریک انصاف) کی حکومت وہ کام کرتی ہے جسے وہ نہ پلٹی کر سکتی ہے اور نہ ہی نگل سکتی ہے، انہوں نے تمام جماعتوں سے کہا کہ وہ بیٹھ کر غور کریں کہ ملک کے مفاد میں کیا ہے۔

وزیر اعظم پر طنز کرتے ہوئے شاہ نے کہا کہ انہوں نے کرکٹر سے سیاستدان بنے خان کو یہ کہتے ہوئے سنا ہے کہ پاکستان کرکٹ ٹیم متحدہ عرب امارات میں چل رہے ٹی ٹوئنٹی ورلڈ کپ میں ان کی وجہ سے شاندار کارکردگی کا مظاہرہ کر رہی ہے۔ انہوں نے کہا کہ میں نے ماضی میں بھی کہا تھا کہ وزیراعظم عمران خان کے لئے یہی بہتر ہے کہ وہ پاکستان کرکٹ بورڈ میں کام کریں۔