At least five people killed, six injured in a blast in Afghanistan's Kabul

کابل: افغانستان کے دارالحکومت کابل کے مضافاتی علاقی میں ہفتے کے روز ایک مصروف تجارتی سڑک پر منی بس میں ہونے والے بم دھماکے میں کم از کم5افراد ہلاک اور دیگر زخمی ہو گئے۔ اس علاقے میں بنیادی طور پر افغانستان کی اقلیتی ہزارہ برادری کے لوگ رہتے ہیں۔

موقع پر موجود ایمبولینس ٹیموں کے ساتھ موجود کارکنوں کا کہنا تھا کہ لگتا ہے کہ دھماکہ بس میں نصب بم کی وجہ سے ہوا ہے۔بس ڈرائیور مرتضیI نے بتایا کہ راستے میں ایک جگہ ایک مشکوک شخص بس میں سوار ہوا اور چند منٹ بعد ہی بس کے پچھلے حصے میں دھماکہ ہو گیا۔ انہوں نے کہا کہ انہوں نے دیکھا کہ بس کے پچھلے حصے میں موجود دو مسافروں کے کپڑوں میں آگ لگ گئی تھی جبکہ دیگر مسافر سامنے کے دروازے سے باہر بھاگے۔

افغانستان میں حکمران طالبان کے ترجمان ذبیح اللہ مجاہد نے کہا کہ ایک منی بس میں آگ لگنے اور دھماکے سے ایک شخص ہلاک اور دوسرا زخمی ہو گیا۔ جائے وقوعہ سے لی گئی تصاویر میں جلتی ہوئی گاڑی سے دھواں اٹھتا دکھائی دے رہا ہے۔ دھماکہ دشتی برچی کے قریب مین ایونیو پر ہوا۔ کابل کے اس مغربی علاقے میں زیادہ تر ہزارہ برادری کے لوگ رہتے ہیں۔