Ahamdis' persecution intensifying since Imran Khan govt came to power: Ahmadiyya Muslim Jamaat to UN 

جنیوا: احمدیہ مسلم جماعت نے اقوام متحدہ کی انسانی حقوق کونسل (یو این ایس سی) کے صدر کو خط لکھا ہے جس میں پاکستان میں احمدیوں پر حکومتی سرپرستی میں ہونے والے ظلم و ستم کو اجاگر کیا گیا ہے۔ بتایا گیا ہے کہ عمران خان کی قیادت میں حکومت نے 20 سے زائد ویب سائٹس پر پابندی لگا دی ہے۔ کونسل کے صدر نے الزام لگایا کہ پاکستانی حکومت نے بغیر کسی خاص وجہ اور وضاحت کے احمدیہ مسلم کمیونٹی کی ویب سائٹس پر پابندی لگائی ہے۔

اقوام متحدہ کی ہیومن رائٹس کونسل کی صدر نزہت شامین کو لکھے گئے خط میں احمدیہ مسلم جماعت کے شعبہ خارجہ کے ترجمان اویس طاہر نے بتایا کہ 2019 میں پاکستان میں پاکستان تحریک انصاف ( پی ٹی آئی) کی قیادت میں عمران خان کی حکومت کے آنے کے بعد احمدیوں پر ظلم و ستم میں تیزی آئی ہے۔خط میں انہوں نے بتایا کہ پاکستان احمدیہ مسلم کمیونٹی سے منسلک ویب سائٹس کو نشانہ بنا رہا ہے جو پاکستان سے باہر ہوسٹ کیا جاتا ہے اور غیر ملکی شہریو ں کی طرف سے چلا چلایا جاتا ہے۔ طاہر نے کہا کہ اب حکومت پاکستان احمدیہ مسلم کمیونٹی کے ساتھ دو مزید ویب سائٹس پر پابندی لگانے کی دھمکی دے رہی ہے جس میں ان پر توہین مذہب اور احمدیہ مخالف قوانین کی خلاف ورزی کا الزام لگایا گیا ہے۔ خط میں کہا گیا ہے کہ پاکستانی حکام نے پہلے ہی پاکستان میں 5 ممالک سے 20 سے زائد احمدی ویب سائٹس پر پابندی لگا دی ہے اور دنیا بھر میں ایم او ایم کے نوٹس جاری کیے جا رہے ہیں۔

انہوں نے کہا کہ ہم مختلف ممالک میں سول سوسائٹی، انسانی حقوق کے کارکنوں، ماہرین تعلیم، سرکاری حکام اور اراکین پارلیمنٹ تک پہنچ رہے ہیں اور ان سے درخواست کر رہے ہیں کہ وہ بطور مانیٹر ان ورچوئل سماعتوں میں شرکت کریں۔ ممکنہ معاملات پر پاکستانی حکومت کو مخاطب کرنے کا یہ ایک منفرد موقع ہے۔ انہوں نے الزام لگایا کہ یکے بعد دیگرے پاکستانی حکومتیں احمدیہ برادری کے انسانی حقوق اور سلامتی کے تحفظ میں ناکام رہی ہیں۔

تعزیرات پاکستان واضح طور پر مذہبی اقلیتوں کے ساتھ تفریق آمیز سلوک کرتا ہے اور احمدیوں کو بالواسطہ یا براہ راست اپنے آپ کو بطور مسلمان پیش کرنے سے منع کرتا ہے۔احمدیوں کو عوامی طور پر اپنے عقیدے کی تبلیغ کرنے یا اس کی دعوت دینے، مسجدیں بنانے یا مسلمانوں کو نماز کے لئے بلانے سے منع کیا گیا ہے۔ پولیس اکثر احمدیوں کے خلاف ہراساں کرنے اور من گھڑت الزامات لگانے میں ملوث رہی ہے۔ احمدیوں کے مذہبی ظلم و ستم سے نمٹنے میں حکومت کی ناکامی نے مذہب کے نام پر ان کے خلاف تشدد کو ہوا دی ہے