China seizes Uganda's only international airport

بیجنگ: پاکستان، سری لنکا اور کئی دوسرے ممالک کے بعد اب چین کے قرض جال کا نیا شکار افریقی ملک یوگنڈا بن گیا ہے۔ یوگنڈا کی حکومت اپنا قرض ادا کرنے میں ناکام رہنے کی وجہ سے اپنا بڑا ہوائی اڈہ چین کے ہاتھوں گنوادیا ہے۔ افریقی میڈیا ٹوڈے کی رپورٹ کے مطابق ، حکومت چین کے ساتھ قرض کے معاہدے کو مکمل کرنے میں ناکام رہی ہے جس میں اس کے واحد ہوائی اڈے کو ادائیگی کی ضمانت بنایا گیا تھا اور قرض کی دم ادئیگی کی صورت میں ا س ہوائی اڈے کی قرقی شرائط نامہ میں درج تھی۔

رپورٹ میں کہا گیا کہ انٹیبے اینٹبی انٹرنیشنل ایئرپورٹ اور دیگریوگنڈا کی جائیدادیں قرق کی گئی ہیں اور چینی قرض دہندگان کی جانب سے قرض کی ثالثی پر قبضہ کرنے پر اتفاق کیا گیا تھا۔رپورٹ کے مطابق صدر یو ویری موسیوینی ( یووری میوزیونی )نے ایک وفد بیجنگ بھیجا تھا، جس میں اس بات کی امید جتائی گئی تھی کہ ان شرائط پر دوبارہ بات چیت کی جا سکے گی۔ رپورٹ میں کہا گیا کہ دورہ ناکام رہا کیونکہ چینی حکام نے معاہدے کی اصل شرائط میں کسی قسم کی تبدیلی کی اجازت دینے سے انکار کر دیا۔اس وقت وزارت خارجہ اور سول ایوی ایش اتھارٹی کی جانب سے نمائندگی کی گئی یوگنڈا حکومت نے 17 نومبر 2015 کو ایکسپورٹ-امپورٹ بینک آف چائنا (ایگزم بینک)کے ساتھ ایک معاہدے پر دستخط کیے تھے اور قرض کی رقم کچھ شرائط کے ساتھ لی گئی تھی۔

رپورٹ میں کہا گیا کہ چینی قرض دہندگان کے ساتھ طے پانے والے معاہدے کا مطلب ہے کہ یوگنڈا نے اپنا سب سے اہم ہوائی اڈہ چین کے حوالے کر دیا ہے۔ یوگنڈا سول ایوی ایشن اتھارٹی (یو سی اے اے)نے کہا کہ فنانسنگ معاہدے میں بعض شرائط اینٹبی انٹرنیشنل ایئرپورٹ اور دیگر یوگنڈا کے اثاثوں کو بیجنگ میں ثالثی پر چینی قرض دہندگان کے ذریعے منسلک اور حاصل کرنے کے لئے ہے۔ چین نے یو گنڈا کی جانب سے2015 کے قرض کی شقوں پر دوبارہ گفت و شنید کرنے کی دلیلوں کو خارج کر دیا ہے ، جس سے یوگنڈا کے صدر یوویری موسیوینی کی انتظامیہ کو مشکلات میں ہے۔

وہیں، 26 نومبر کو چینی وزارت خارجہ کے متعلقہ سربراہ نے صحافیوں کو بتایا کہ چین کا افریقہ کے لیے نام نہاد قرضوں کا جال بنانے کا دعویٰ نہ تو حقیقت ہے اور نہ ہی منطقی ہے۔ کوویڈ – 19 وبا کے قہر کے چین افریقی ممالک کے قرضوں کے بوجھ کو کم کرنے کی حمایت کرتا ہے، اور غریب ترین ممالک کے لیے قرض کی ادائیگی کو معطل کرنے کے لیے G20 اقدام کو فعال طور پر نافذ کرتا ہے۔