Pakistan hands over two Pakistani Taliban ommanders to Afghan Taliban

اسلام آباد : معتبر ذرائع سے موصول اطلاع کے مطابق پاکستان نے مذاکرات کی راہ ہموار کرنے کے لیے تحریک طالبان پاکستان (پاکستانی طالبان) کے دو سینیئر کمانڈروں کو مسلم خان اور محمود خان کوافغانستان کے حوالے کر دیا۔ باخبر ذرائع نے اپنا نام صیغہ راز میں رکھنے کی شرط پر ریڈیو آزادی کو بتایا کہ ان دونوں سینیر کمانڈروں نے اس امکان کے تحت خود سپردگی کی کہ اگر پاکستانی فوج ٹی ٹی پی کے ساتھ فوجی مذاکرات کرنے میں کامیاب ہو گئی تو ان کی رہائی کے امکانات روشن ہوجائیں گے۔

ان دو بدنام زمانہ کمانڈروں کو 2009میں سوات میں، جہاں یہ دونوں ملا فضل اللہ گروپ کے سینیئر لیڈران تھے،ایک پاکستانی فوجی کارروائی کے دوران گرفتار کیا گیا تھا۔ذرائع کے مطابق اب ایک پاکستانی فوجی وفد کابل میں افغان طالبان کی ثالثی سے پاکستانی طالبان لیڈروں سے مذاکرات کر رہا ہے۔اگر پاکستانی طالبان اور پاکستانی فوج صلح پر آمادہ ہو جاتی ہے تو مسلم خان اور محمود خان کو رہا کر دیا جائے گا۔پاکستانی طالبان نے امن مذاکرات شروع کرنے کی راہ ہموار کرنے کے لیے چند روز پہلے پاکستا ن کے ساتھ جنگ بندی میں توسیع کا اعلان کیا تھا۔