Emotional scenes as Ukraine returns to international football with 3-1 win over Scotland in 2022 World Cup qualifie

گلاسگو(اسکاٹ لینڈ): روسی حملے کی زد میں خوف کے ایام گذار رہے یوکرین کے شہریوں میں اس وقت خوشی کے کچھ لمحات بھی آئے جب ان کی قومی ٹیم نے 2022ورلڈ کپ فٹبال کوالیفائی میں اسکاٹ لینڈ کو ایک کے مقابلہ تین گول سے شکست دے کر قطر کا ویزہ /ٹکٹ حاصل کرنے کے اپنے امکانات روشن رکھے۔ یہ اہم میچ اگرچہ پروگرام کے مطابق مارچ میں کھیلا جانا تھا لیکن روسی حملے کے باعث اسے موخر کر دیا گیا اور آخر کار جنگ کے دوران ہی بدھ کے روز اس میچ کی اجازت مل گئی ۔لیکن میچ ہونے کے باوجود جذبات بڑتے متلاطم تھے اور اسکاٹ لینڈ کے ہیمڈن پارک میں میچ شروع ہونے سے پہلے اسکاٹ لینڈ اور یوکرین کے تمام کھلاڑیوں میچ ریفری و لائن مینوں ، ٹیم انتظامیہ۔

اسیڈیم کے منتظمین اور میدان میں موجود فٹبال شوقینوں نے یوکرین پر حملے میں ہلاک ہونے والوں کو خراج عقیدت پیش کیا ۔ قبل ازیں یوکرینی پرچم میں لپٹے یوکرین کے کھلاڑی سرنگ کے ذریعہ میدان میں نمودار ہوئے ۔ادھر اسٹیڈیم میں یوکرینی ٹیم کے شیدائیوں نے بھی یوکرین کے پرچم بلند کیے اور روسی حملے کے درمیان اپنے ملک اور اس کی فوج سے اظہار یکجہتی کرنے کے لیے اپنے قومی ترانے کے اختتام تک پرچم ہوا میں لہراتے رہے۔

میچ سے قبل اپنی پریس کانفرنس میں یوکرینفٹبال ٹیم کے کپتان و مڈ فیلڈر الیگزینڈر زینچینکو نے2022ورلڈ کپ کے لیے کوالی فائی کرنے کی اپنی ٹیم کے کھلاڑیوں کی زبردست خواہش اور امنگ بڑے رقت بھرے انداز میں بیان کی اور اس دوران ان کی آنکھیں نم تھیں۔اور ٹیم جس وقت میچ جیت کر میدان سے باہر نکلی تو اسٹیڈیم میں موجود اور یوکرین میں ٹی وی ناظرین اس جیت کو روس پر اپنے ملک کی جیت میں تبدیل ہوتا محسوس کر رہے تھے۔ اور اکچھ فٹبال شوقینوں نے کہا بھی کہ ایک روز اسی جیت کی طرح یوکرین کی فوج بھی روس کو میدان جنگ میں یہ باور کرانے میں کامیاب ہو جائے گی کہ اس کی فوجی یوکرین کو نہیں جیت سکتیں ۔