Afghanistan: Powerful earthquake leaves more than 950 dead

کابل: افغانستان کے خوست صوبے کے آس پاس کے علاقوں میں منگل اور بدھ کی درمیانی شب میں آنے والے زلزلہ میں تقریباً1000افراد ہلاک اور سیکڑوں زخمی ہوگئے۔تازہ ازہ ترین سرکاری اعداد و شمار کے مطابق بدھ کی صبح ملک کے متعدد دیہات میں آنے والے زلزلے میں تقریباً 920 افراد ہلاک اور 600 سے زائد زخمی ہوئے ہیں۔

خبر رساں ایجنسی رائٹرز کے مطابق افغان میڈیا پر جاری کی جانے والی تصاویر میں ملک کے دوردرا دیہات میں واقع گھروں کو ملبے کے ڈھیر میں دیکھا گیا ۔علاوہ ازیں جا بجا لاشین بھی بکھری پڑی ہیں ۔کچھ لاشیں کمبل میں لپٹی ہیں ڈیزاسٹر مینجمنٹ کے نائب وزیر مملکت رومی شرف الدین مسلم نے آج (بدھ) دوپہر کے بعد ایک نیوز کانفرنس میں950ہلاکتوں کی تصدیق کی ہے۔انہوں نے بتایاکہ گذشتہ دو عشروں کے دوران آنے والا یہ سب سے بھیانک اور ہلاکت خیز زلزلہ ہے۔

پریس کانفرنس میںرومی شرف الدین مسلم نے متاثرہ خاندانوں کو نقد امداد کا اعلان کیانیزبین الاقوامی اداروں سے متاثرہ خاندانوں کی مدد کرنے کا مطالبہ کیا۔دریں اثنا امارت اسلامیہ کے رہنما رومی ہیبت اللہ اخندزادہ نے ملک میں متاثرہ خاندانوں کے نام تعزیت کا پیغام بھیجا ہے۔

امارت اسلامیہ کے سپریم لیڈر نے بھی حکام اور بین الاقوامی امدادی اداروں سے اس قدرتی واقعہ کے متاثرین کے لواحقین کی مدد کرنے کی اپیل کی ہے۔ امارت اسلامیہ کے ترجمان ذبیح اللہ مجاہد نے ایک ٹویٹ میں زلزلہ متاثرین کی مدد کے لیے کابینہ کے ہنگامی اجلاس کا اعلان کیا۔پولس کے مطابق زلزلہ آیا تو لکی مروا میں ایک مکان کے اندرسورہا مقامی فٹبال ٹیم کا ایک کھلاڑی چھت گرنے سے ملبہ میں دب گیا۔