PM Modi delivers 'strong message' at G7 Summit

میونخ: جرمنی میں حال ہی میں ختم ہونے والی جی7 میٹنگ میں وزیر اعظم نریندر مودی نے ہندوستان کے بارے میں ایک بہت ہی مضبوط پیغام دیا اور ہندوستان کو دنیا میں ہندوستان کے بڑھتے ہوئے تعاون سے آگاہ کیا۔ وزیر اعظم مودی نے یوکرین تنازعہ کو بات چیت اور امن کے ذریعے پرامن طریقے سے حل کرنے کی ضرورت پر زور دیا اور ہندوستان کو عالمی حل فراہم کرنے والے کے طور پر پیش کیا۔ عالمی رہنماو¿ں سے ملاقات کے دوران انہوں نے خوراک، صحت اور توانائی کے بحرانوں کی صورت میں جی7 سمیت دنیا کے امیر ترین ممالک کو واضح پیغام دیا۔ ارجنٹائن، جنوبی افریقہ اور انڈونیشیا کے رہنماؤں کے ساتھ وزیر اعظم نریندر مودی کی ملاقاتیں، خاص طور پر جغرافیائی سیاسی کشیدگی کے درمیان، جنوبی-جنوبی تعاون کو مضبوط بنانے کی کوشش تھی۔

وزیر اعظم کے یورپ کے دو متواتر دوروں سے ایک بنیادی پیغام تھا کہ ہندوستان ایک کثیر قطبی نظام بن رہا ہے۔ اپنے دو روزہ جی 7 کے سفارتی دورے کے دوران وزیر اعظم مودی نے امریکی صدر جو بائیڈن، فرانس کے ایمینوئل میکرون اور کینیڈا کے جسٹن ٹروڈو سمیت عالمی رہنماو¿ں سے ملاقات کی اور اپنے خیالات کا اظہار کیا، جب کہ انھوں نے جنوبی افریقہ کے صدر سیرل رامافوسا، جرمنی کے چانسلر اولاف شولز اور انڈونیشیا کے صدر جوکو ویدودو سے طویل عرصے سے ملاقات کی۔
۔

ہندوستان میں وزیر اعظم کے دفتر کے آفیشل ٹویٹر ہینڈل نے ٹویٹ کیا، “مودی اور صدرجوکو ویدودو کے درمیان ایک بہت ہی نتیجہ خیز اور اہم ملاقات ہوئی۔ ان کی بات چیت سے ہندوستان اور انڈونیشیا کے درمیان جامع اسٹریٹجک پارٹنرشپ کو تقویت ملے گی۔دونوں رہنماو¿ں نے تجارتی تعلقات اور رابطوں کو فروغ دینے کے طریقوں پر بھی تبادلہ خیال کیا۔ انہوں نے یورپی یونین کمیشن کی صدر ارسلا وان ڈیر لیین سے بھی ملاقات کی۔ جی7 سربراہی اجلاس کے بعد، وزیر اعظم مودی نے ٹویٹ کیا کہ انہوں نے یورپی قوم کو ایک نتیجہ خیز دورہ قرار دیا۔ انہوں نے ٹویٹ کیامیں جرمنی کے لوگوں شولز اور جرمن حکومت کا پورے سفر میں مہمان نوازی کے لیے شکریہ ادا کرتا ہوں۔ مجھے یقین ہے کہ ہندوستان۔جرمنی دوستی آنے والے وقت میں نئی بلندیوں کو چھوئے گی۔

انہوں نے لکھا میں نے @جی&ایس سربراہی اجلاس میں شرکت کی بہت سے عالمی رہنماو¿ں کے ساتھ بات چیت کی اور میونخ میں کمیونٹی کی ایک یادگار تقریب میں شرکت کی۔ اس دوران ہم نے عالمی فلاح و بہبود اور خوشحالی کو آگے بڑھانے کے لیے متعدد مسائل پر تبادلہ خیال کیا۔مودی نے ایک ٹویٹ میں کہا۔ انہوں نے اسی طرح کے پیغامات جرمن زبان میں بھی پوسٹ کیے تھے۔میڈیا رپورٹ کے مطابق، وزیر اعظم مودی نے سربراہی اجلاس کے موقع پر یورپی کمیشن کی صدر ارسلا وان ڈیر لیین کے ساتھ بات چیت کی۔ بات چیت کے دوران، دونوں رہنماو¿ں نے تجارت، سرمایہ کاری، ٹیکنالوجی اور موسمیاتی کارروائی میں ہندوستان-یورپی یونین تعاون کا جائزہ لیا۔