Canada says officials were barred from tycoon's trial in China

بیجنگ: چینی حکام نے کناڈاکے سفارت کاروں کو پانچ سال قبل ہانگ کانگ سے لاپتہ ہونے والے چین نژاد کناڈیائی صنعت کار کے مقدمے میں حصہ لینے کی اجازت دینے سے انکار کر دیا ہے۔ کناڈا کی حکومت نے منگل کے روز یہ اطلاع دی۔صنعت کار ژاو¿ جیان ہووا کو آخری بار جنوری 2017 میں ہانگ کانگ کے ایک پر تعیش ہوٹل میں دیکھا گیا تھا اور خیال کیا جاتا ہے کہ چینی حکام انہیں چین لے گئے تھے۔ تاہم، حکومت نے کبھی اس بات کی تصدیق نہیں کی کہ آیا اسے حراست میں لیا گیا تھا یا ان کے خلاف الزامات لگائے گئے ہیں۔

کناڈا کی حکومت نے کہا کہ ابتدائی طور پر ڑا و¿کو پیر کو سماعت ہوئی ، لیکن اس نے اس بارے میں کوئی معلومات فراہم نہیں کیں کہ یہ سماعت کہاں اور کہاں ہوئی۔ ان کے خلاف الزامات کے بارے میں کوئی اطلاع نہیں دی گئی۔ کناڈا کی حکومت نے ایک بیان میں کہا، کینیڈا نے سماعت میں شرکت کے لیے کئی درخواستیں دیں۔ چینی حکام نے ہمیں سماعت میں شرکت کی اجازت نہیں دی۔قابل غور ہے کہ ٹومارو گروپ کے بانی ڑا و¿چینی تاجروں کی جانب سے بدتمیزی کے کئی الزامات کے بعد اچانک غائب ہو گئے تھے۔ ہانگ کانگ پولیس نےژا و¿کی گمشدگی کی تحقیقات کی تھی اور کہا تھا کہ وہ سرحد پار کر کے چین گیا تھا۔ خدشہ تھا کہ انہیں ان کی مرضی کے خلاف وہاں لے جایا گیا لیکن اسی ہفتے منگ پاو¿ اخبار میں ڑا و¿کے نام سے ایک اشتہار میں کہا گیا کہ انہیں ان کی مرضی کے خلاف نہیں لے جایا گیاہے۔