PTI turns the tables on PML-N, snatches Punjab back in by-polls

لاہور: (اے یو ایس ) صوبے پنجاب میں وسیع پیمانے پر تشدد اور خونیں جھڑپوں سائے میں 20نششتوں پر ہوئے ضمنی انتخابات میں حکمراں جماعت پاکستان مسلم لیگ نواز (پی ایم ایل این) کو اس وقت زبردست ہزیمت اٹھانا پڑی جب معزول وزیر اعظم عمران خان کی پاکستان تحریک انصاف(پی ٹی آئی) نے 20میں سے15سیٹیں جیت کر پنجاب اسمبلی میں سب سے بڑی واحد پارٹی ہونے کا اعزاز حاصل کر لیا ۔پی ایم ایل این صرف 4سیٹیں ہی جیت سکی ۔ 371رکنی اسمبلی میں اب پی ٹی آئی کے 178اراکین ہیں جبکہ حکمراں جماعت پی ایم ایل این کے 167، پی ایم ایل کیو کے 10پی پی پی کے7اورآزاد 6ہیں۔

قبل ازیں ان20سیٹو کے لیے ہوئے ضمنی انتخابات میں پولنگ کے دوران تمام بوتھوں پر ووٹروں کی لمبی قطاریں دیکھی گئی اور اس میں عورتوں کی اچھی خاصی تعداد ہے ۔ اتنی کثیر تعداد میں ووٹروں کا اپنا حق رائے دہی استعمال کرنا ہی اس انمر کی گواہی دے رہا تھاکہ حکومت مخالف ووٹ پڑ رہا ہے۔اس دوران کئی مقامات پر مسلم لیگ اور پی ٹی آئی کے ورکروں میں تصاوم ہوا ۔ اس ضمنی انتحابات میں 175امیدوار میدا ن میں تھے لیکن اصل مقابلہ مسلم لیگ اور پی ٹی آئی کے درمیان رہا ۔ یہ ضمنی انتخابات زبردست اہمیت کے حامل تھے کیونکہ اس کے نتائج سے دونوں پارٹیوں کا مستقبل کا فیصلہ ہونا طے تھا جو ہو گیا ۔۔