Turkey will block Finland, Sweden's entry into NATO if promises not kept : Erdogan

استنبول:(اے یو ایس ) ترک صدررجب طیب اردوغان نے کہا ہے کہ اگر فن لینڈ اور سویڈن نے انسداد دہشت گردی سے متعلق اپنے وعدے پورے نہ کیے تو ترکی ان دونوں کی معاہدہ شمالی اوقیانوس کی تنظیم ناٹو کی رکنیت کے لیے درخواست منجمد کر دے گا۔ترکی کے سرکاری نشریاتی ادارے ٹی آر ٹی کے مطابق صدر اردوغان نے کہا کہ میں ایک بارپھرباورکرانا چاہتا ہوں کہ اگر سویڈن اور فن لینڈ نے ناٹو کی رکنیت کے لیے ہماری شرائط پوری نہیں کیں تو ہم اس عمل کو روک دیں گے۔

انھوں نے مزید کہا کہ ان کے خیال میں سویڈن فی الحال اچھا امیج نہیں دکھا رہا ہے ۔سویڈن اور فن لینڈ نے ناٹو کی رکنیت کے ذریعے اپنی سلامتی بڑھانا چاہتے ہیں اور یوکرین پر روس کے حملے کے ردعمل میں ناٹو نے کئی دہائیوں سے جاری فوجی عدم صف بندی کا خاتمہ کیا ہے اور ان دونوں ممالک کو رکنیت دینے کی پیش کش کی ہے۔ترکی نے مئی میں اعلان کیا تھا کہ اسے دونوں ممالک کے ناٹومیں شمولیت پراعتراضات ہیں۔اس نے ان پر ترکی کے کرد عسکریت پسندوں یعنی کردستان ورکرز پارٹی (پی کے کے) کی حمایت کا الزام لگایا گیا تھا۔

ترکی پی کے کے کو دہشت گردتنظیم سمجھتا ہے اور وہ سویڈن سے بالخصوص فتح اللہ گولن کے پیروکاروں سمیت درجنوں مشتبہ دہشت گردوں کو حوالے کرنے کا مطالبہ کررہا ہے۔ان پر ترکی نے 2016 میں ناکام بغاوت کی کوشش کا لزام لگایا تھا۔تاہم تینوں ممالک نے گذشتہ ماہ ایک معاہدے پردستخط کیے تھے۔اس میں فن لینڈ اورسویڈن کی ناٹو کی رکنیت کے لیے درخواست کی حمایت کی تصدیق کی گئی تھی اورانھوں نے سلامتی اور انسداد دہشت گردی میں تعاون پر اتفاق کیا تھا۔