Trump declines to answer questions in civil investigation

نیویارک: امریکہ کے سابق صدر ڈونالڈ ٹرمپ نے اپنے کاروباری معاملات میں دیوانی تحقیقات میں سوالات کے جواب دینے سے انکا رکر دیا۔ انہوں نے گواہی دینے کے لیے اٹارنی جنرل کے دفتر میں پہنچنے کے بعد ایک بیان جاری کر کے کہا کہ وہ خود شہادت دینے کے خلاف پانچویں ترمیمی حق کا استعمال کریں گے۔

ٹرمپ نے نیویارک کے اٹارنی جنرل لیٹیا جیمز پر بھی تنقید کی جس کو انہوں نے ”ٹرمپ کو پکڑو اور نیست و نابود کر د و “کی پالیسی پر عمل پیرابتایا ۔جیمز کا عملہ اس بارے میں دیوانی تحقیقات کر رہا ہے کہ آیا ٹرمپ آرگنائزیشن نے قرضے اور ٹیکس مراعات سے مستفید ہونے کے لیے مالیاتی گوشواروں پر اثاثوں کی لاگت کو غلط طریقے سے بڑھایا۔

ٹرمپ کے دو بچوںڈونلڈ ٹرمپ جونیئر اور ایوانکا ٹرمپ سے اس ماہ کے اوائل میں پوچھ گچھ کی جا چکی ہے۔ یہ پوچھ گچھ فیڈرل بیورو آف انویسٹی گیشن (ایف بی آئی) کے ایجنٹوں کے پام بیچ، فلوریڈا میں ٹرمپ کے ملیاتی ادارے مار۔اے۔لاگو ر تفریح گاہ پر چھاپے کے دو دن بعد سامنے آیا ہے۔غیر اعلانیہ کارروائی اس خفیہ مواد کی تلاش میں کی گئی تھی جو ٹرمپ جنوری 2021 میں اپنے عہدے سے رخصت ہوتے وقت مبینہ طور پر اپنے ساتھ وائٹ ہاو¿س سے مار-ا-لاگو لے گئے تھے ۔