Delhi tops list of world's most polluted cities, elders comlaint of breathing difficulty

نئی دہلی: (اے یو ایس)عالمی صحت تنظیم نے نئی دہلی اور کولکاتا کو دنیا کے سب سے زیادہ فضائی آلودہ شہرقراردیا ہے اور کہا کہ اس سے لوگوں کے صحت پر برا اثر پڑرہا ہے ۔اپنے تازہ لسٹ میں ادارے نے چین کے بوجان شہر شہنگائی اور روس کے ماسکو شہر کو بھی آلودہ شہروں میں شامل کیاہے۔نئی دہلی کو دنیا کا سب سے آلودہ شہر میں شمارکیاگیا ہے۔اس کے بعد کولکاتا کا نمبر آیا ہے، جب کہ ڈھاکہ پانچویں نمبر پر ہے اور پاکستان کی بندرگاہی شہر کراچی کو آٹھویں نمبر پر رکھاگیا ہے۔انڈونیشیا کے شہر کو بھی ان میں شمار کیاگیا ہے۔

رپورٹ میں کہاگیا ہے کہ اکثر آلودہ شہر ایشیا اور افریقہ سے رپورٹ کے گئے ہیں۔آلودگی کی وجہ سے ہرسال ستر لاکھ لوگوں کی موت ہورہی ہے اس کی وجہ سے نوجوانوں اور خاص کر بوڑھوں کو سانس لینے میں تکلیف ہورہی ہے۔چونکہ شہروںمیں آئے دن آبادی بڑھ رہی ہے اس لیے وہاں پر ہوائی آلودگی بھی بڑھ رہی ہے۔اور اس سے شہر کے طبی سسٹم پر اثر پڑتا ہے۔ایک رپورٹ کے مطابق 2050میں دنیا کی 68فیصد آبادی شہرو ں میں رہے گی اور اس لیے سائنس داں کے لیے یہ اہم ہے کہ وہ مضر ہوا سے ہونے والی بیماریوں کے علاج کا صحیح سد باب کرے۔حالاں کہ جگہ جگہ پر آلودگی چیک کرنے کے لیے میٹر لگائے گئے ہیں۔اور حکومت نے ڈیزل سے چلنے والی گاڑیوں پر پابندی بھی لگائی ہے لیکن اس میں کمی نظر نہیں آرہی ہے بلکہ آئے دن اس میں اضافہ ہی ہورہا ہے۔