A strong India means a strong America: US lawmakers

واشنگٹن: تین بااثر امریکی قانون سازوں نے کہا ہے کہ ایک مضبوط ہندوستان کا مطلب ایک مضبوط امریکہ ہے۔ انہوں نے ایک ایسے وقت میں دنیا کے دو سب سے بڑے جمہوری ممالک کے درمیان تعلقات مضبوط بنانے کے عزم کااظہار کیا، جب دنیاکئی چیلنجز کا سامنا کر رہی ہے۔ امریکی قانون سازوں نے یہ ریمارکس واشنگٹن میں ہندوستانی سفارت خانے کی طرف سے ہندوستان کے مرکزی سائنس اور ٹیکنالوجی کے وزیر جتیندر سنگھ کے اعزاز میں دی گئی ضیافت میں کہے۔سائنس، خلائی اور ٹیکنالوجی کی کمیٹی کی نائب سربراہ سینئر قانون ساز ہیلی اسٹیونس نے کہا، میرا ماننا ہے کہ ایک مضبوط ہندوستان کا مطلب ایک مضبوط امریکہ ہے۔

انہوں نے کہا کہ ماحولیاتی تبدیلی سے لے کر وبائی امراض تک کے پیچیدہ عالمی چیلنجوں کا سامنا کر رہے بڑے جغرافیائی علاقوں کے ساتھ دو جمہوریتوں کے طور پر ہماری حالت زار ، چیلنجز جنہیں ہم مواقع میں تبدیل کر سکتے ہیں، وہ چیلنجز جو کاروباری مواقع پیدا کرتے ہیں۔ چیلنجز جو ہمیں ایک ساتھ لانے کے لئے مجبور کرتے ہیں۔ اسی لیے میں ہند-امریکہ تعلقات کے درمیان مضبوط رشتوں میں یقین رکھتی ہوں۔ وہیں، ایم پی جیری میک نیرنی نے کہا کہ جو شخص ہندوستان اور امریکہ کے تعلقات کی اہمیت کو نہیں دیکھ سکتا وہ ‘اندھا’ ہے۔ ایم پی ڈیبورا راس نے بھی ہندوستان اور امریکہ کے درمیان مضبوط تعلقات کی وکالت کی۔راس ایوان کی سائنس، خلائی اور ٹیکنالوجی کمیٹی کے رکن ہونے کے ساتھ ساتھ عدالتی کمیٹی کے رکن بھی ہیں۔