Afghanistan will be included in UNSC meeting: Faiq

جینوا: اقوام متحدہ میں افغانستان کے مستقل مندوب نصیر احمد فائق نے کہا ہے کہ توقع ہے کہ اقوام متحدہ کی سلامتی کونسل ایک اجلاس کرے گی جس میں افغانستان میںخواتین اور امن وسلامتی کی صورت حال کا جائزہ لیا جائے گا۔اس اجلاس میں اقوام متحدہ میں افغانستان کے ناظم الامور شرکت کریں گے۔ فائق نے کہا کہ اس اجلاس میں بشمول افغانستان وہ ممالک شرکت کریں گے جو اقوام متحدہ کی سلامتی کونسل کے رکن نہیں ہیں نیز اجلاس میں افغان خواتین کا معاملہ اور اس حوالے سے موجود خدشات بھی موضوع بحث رہیں گے ۔

دریں اثنا، سابق حکومت کی کچھ خاتون ملازمین نے اپنے حقوق کو یقینی بنانے کا مطالبہ کیا۔حقوق نسواں کی ایک علمبردار اینور ازبک نے کہا کہ خواتین کو تعلیم اور کام کے حقوق حاصل ہونے چاہئیں۔، خواتین کے حقوق کی ایک اور کارکن مریم معروف اروین نے کہا کہ مجھے امید ہے کہ اجلاس میں لڑکیوں کے اسکولوں کو دوبارہ کھولنے، ملازمتوں می ، سماجی اور سیاسی سرگرمیوں تک خواتین کی رسائی پر توجہ دی جائے گی ۔

امارت اسلامیہ نے کہا کہ ملک میں انسانی حقوق کی نہ کوئی خلاف ورزی ہو رہی ہے اور نہ ہی حقوق انسانی کے خلاف کوئی رکاوٹ ہے نیز شہریوں کے حقوق کو یقینی بنایا گیا ہے۔اسلامی امرات کے نائب ترجمان بلال کریمی نے کہا کہ اسلامی امارات کے سائے تلے افغانستان میں انسانی حقوق کو کوئی چیلنج درپیش نہیں ہے ،اور تمام افغان شہریوں کو اسلامی امارات کے اندر اور شریعت کے تحت حقوق حاصل ہیں۔