Iran claims it has developed a hypersonic missile

تہران: ایران کے پاسداران اسلامی انقلاب کے ایرو اسپیس یونٹ کے کمانڈر جنرل امیر علی حاجی زادہ نے دعویٰ کیا ہے کہ ایران نے تمام دفاع نظام کا احاطہ کرنے کی صلاحیت کا ایک ہائپر سونک میزئل تیار کر لیا ہے۔روایتی بالسٹک میزائلوں کی طرح جو ایٹمی اسلحہ لے کر جا سکتے ہیں، آوا ز سے پانچ گنا زیادہ تیز رفتار سے پرواز کر سکتے ہیں اور تیز رفتار سے ہدف تک پہنچ سکتا ہے۔

ایران کی نیم حکومتی خبر راں ایجنسی فارس حاجی زادہ کےحوالے سے بتایا کہ اس بالسٹک مزائل بنانے کا مقصد کامیابی کے ساتھ فضائی دفاعی نظام سے نمٹنا ہے۔ انہوں نے مزید کہا کہ یہ میزائل تمام میزائل شکن دفاع کے نظام کو تہس نہس کرنے کی زبردست صلاحیت کا حامل ہے۔

پاسداران اسلامی انقلاب کے کمانڈر کے اس دوعوے پر ردعمل ظاہر کرتے ہوئے عالمی جوہری توانائی ادارے (آئی اے ای اے) کے سربراہ رافیل گروسی نے کہا کہ ہم سمجھتے ہیں کہ اس طرح کے اعلانات ایرانی جوہری پروگرام کے حوالے سے توجہ اور تشویش میں اضافہ کرنا ہے مگر اس سے ایران کے جوہری پروگرام سے متعلق مذاکرات پر کوئی اثر نہیں پڑے گا ۔