I share this pain.says Vladimir Putin to mothers of soldiers killed in Ukraine

ماسکو: روس کے صدر ولادیمیر پوتن نے جمعہ کے روز ان ماؤں کے، جن کے بیٹے یوکرین میں لڑنے کے دوران ہلاک ہو گئے ہیں، ایک گروپ سے ملاقات کی اور کہا کہ وہ ان کے دکھ درد میں برابر کے شریک ہیں ۔ یہ ملاقات مدرز ڈے سے، ج جسے روس میں اتوار کو منایا جائے گا، دو روز قبل اور ایک خلط ملط فوجی مسودے کے بعد روسی فوجیوں کے خاندانوں کے بڑھتے ہوئے غصے کے درمیان ہوئی۔

پوتین نے ماسکو کے قریب اپنی رہائش گاہ پر خواتین سے کہا کہ میں چاہتا ہوں کہ آپ جان لیں کہ میں ذاتی طور پر اور ملک کی پوری قیادت آپ لوگوں کے اس درد میں شریک ہیں۔ انہوں نے اپنے ابتدائی کلمات میں، جو صرف چند منٹ تک جاری رہا ، کہا کہ ہم سمجھتے ہیں کہ کوئی بھی شے ایک بیٹے، ایک بچے کے کھو دیے جانے کا متبادل نہیں بن سکتی۔

انہوں نے کہا کہ میں اظہار تعزیت سے متعلق کوئی رسمی جملوں سے رسم دنیا نبھانے کی اپنے اندر ہمت نہیں پاتا ۔انہوں نے مزید کہا کہ یوکرین میں روس کی جارحیت کے بارے میں کچھ خبروں پر اعتبار نہیں کیا جا سکتا۔بہت ساری جعلی خبریں، دھوکہ دہی اور جھوٹ کاپلندہ ہیں۔پوتین ان خواتین سے یہ بھی کہا کہ وہ انٹرنیٹ پر جو کچھ پڑھتی ہیں اس سے ہوشیار رہیں۔ انہوں نے کہا کہ یہ واضح ہے کہ ہماری زندگی ٹی وی اسکرینوں یا یہاں تک کہ انٹرنیٹ پر، جہاں کسی بھی چیز پر بھروسہ نہیں کیا جا سکتا، دکھائی جانے والی چیزوں سے کہیں زیادہ پیچیدہ ہے ۔