Sanctions against Russia proved effective says Blinken

واشنگٹن : امریکہ نے پاکستان ، سعودی عرب، ایران روس اور چین سمیت 12ممالک کو سال 2022 کے دوران مذہبی آزادی کی شدید خلاف ورزیوں کے مرتکب ممالک کی فہرست میں شامل کیا ہے۔ امریکی وزیر خارجہ انٹونی بلنکن نے کہا کہ دنیا بھر میں حکومتوں، غیر سرکاری تنظیموں نے اپنے عقائد اور مذاہب و مسلک کی بنیاد پر کئی لوگوں کو ہراساں کیا ڈرایا دھمکایا اور مختلف طریقوں سے خوفزدہ ، خوف زدہ کیا اور جیل میں بند کرنے کے ساتھ ساتھ انہیں قتل بھی کیا۔

امریکی وزیر خارجہ نے کہا کہ کچھ ایسی مثالیں بھی موجود ہیں کہ سیاسی مقاصد حاصل کرنے کے لیے لوگوں کی مذہبی آزادی کو سلب کیا گیا ۔ انہوں نے یہ بات زور دے کر کہی کہ کہ ایسے اقدام تفریق پیدا کرنے کے ساتھ ساتھ معاشی تحفظ اور سیاسی استحکام کو غیر مستحکم کرنے کے ساتھ ساتھ امن کے لیے خطرہ ہیں اور امریکا ایسے ممالک کے ساتھ، جن پر یہ الزامات ہیں،کھڑا نہیں ہو گا۔

امریکی وزیر خارجہ نے مزید کہا کہ آج میں مذہبی آزادی کی شدید خلاف ورزیوں میں ملوث یا ایسے اقدامات کو برداشت کرنے کی وجہ سے بین الاقوامی مذہبی آزادی قانون مجریہ 1998کے تحت پاکستان، روس چین، ایران، سعودی عرب، تاجکستان، ترکمانستان، نکاراگوا، شمالی کوریا، میانمار اور ایریٹریا کو خاص تشویش والے ممالک(سی پی سی) میں شامل کرنے کا اعلان کرتا ہوں۔