At least 125 killed in Indonesia soccer stadium crushتصویر سوشل میڈیا

جکارتہ: انڈونیشیا کے ایک فٹبال اسٹیڈیم میں ایک میچ کے دوران بھگدڑ مچ جانے سے 125افراد ہلاک ہو گئے۔ پہلے یہ تعداد175بتائی گئی تھی لیکنبعد میں انکشاف ہوا کہ کچھ لاشوں کو دوبا ر شمار کر لیا گیا تھا۔ اندونیشیا کے پولس سربراہ کے مطابق مشرقی جاوا میں یہ ہولناک سانحہ جسے دنیا بھر میں تاریخ کا کا اب تک کا سب سے زیادہ ہلاکت خیز کہا جاتا ہے۔

اتوا ر کے روز ،شرقی جاوا کے شہر ملانگ میں اندونیشیا ساکر لیگ کے دوان اریما ایف سی اور پرسی بایا سورا بایا کے حامی اس وقت ایک دوسرے سے گتھم گتھا ہو گئے جب میزبان ٹیم اریما ایف سی یہ میچ2-3کے فرق سے ہار گئی۔شکست کھانے والی ٹیم کے حامیوں نے طیش میں آکر میدان پر ہلہ بول دیا جس پر پولس نے اشک آور گولے داغے جس سے بھگدڑ مچ گئی اور افرا تفری میں د پولا اہلکار سمیت125ہلاک اور 300سے زائد خمی ہو گئے ۔

حادثے پر صدر جوکو ویدوڈو نے غم و صدمہ کا اظہار اور ہلاک شدگان کے پسماندگان سے ہمدردی و تعزیت کرتے ہوئے حکم دیا ہے کہ انڈونیشیا کی ٹاپ لیگ کے تمام میچز اس وقت تک روکے جائیں جب تک کہ اس حادثے کی تحقیقات مکمل نہیں ہو جاتیں۔ واضح ہو کہ یہ دونوں ٹیمیں روایتی حریف ہیں۔

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *