Bomb attached to a bus in Damascus exploded and killed one Syrian soldierتصویر سوشل میڈیا

دمشق: (اے یو ایس)شام کے دارالحکومت دمشق میں ایک فوجی ٹرانسپورٹ بس میں دھماکے میں ایک فوجی ہلاک اور گیارہ زخمی ہو گئے ہیں۔شام کے سرکاری ذرائع ابلاغ کے مطابق دارالحکومت میں منگل کے روز صبح سات بج کر 25 منٹ پربم دھماکا ہوا تھا اور دھماکا خیزمواد بس میں نصب کیا گیا تھا۔

فوری طور پر کسی گروپ نے اس بم حملے کی ذمے داری قبول کرنے کا دعویٰ نہیں کیا ہے۔شام میں گذشتہ ایک عشرے سے جاری تنازع میں لاکھوں افراد ہلاک اور بے گھرہوچکے ہیں اور ملک ٹوٹ پھوٹ اور انتشار کا شکار ہے۔تاہم دارالحکومت دمشق دوسرے علاقوں کے مقابلے میں تشدد کے واقعات سے بچارہا ہے۔البتہ اس شہر میں چند مہینوں کے وقفے کے بعد چھوٹے بڑے بم دھماکے ہوتے رہتے ہیں۔اس سے پہلے گذشتہ سال 20 اکتوبر کو دمشق میں ایک فوجی بس پر بم حملے میں 14 افراد ہلاک ہو گئے تھے۔

واضح رہے کہ شامی فوج نے 2018 میں روس اور ایران کی حمایت یافتہ ملیشیاو¿ں کی پشت پناہی سے دمشق علاقوں میں موجود باغیوں کو کچل دیا تھا اور انھیں وہاں سے نکال باہر کیا تھا یا انھیں حکومت سے سمجھوتوں کے تحت شمالی مغربی صوبہ ادلب میں منتقل کردیا گیا تھا۔ روس اور ایران کی فوجی مدد سے شامی صدر بشار الاسد اب ملک کے بیشترعلاقوں پردوبارہ قابض ہوچکے ہیں۔

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *