North Korea fires two missiles after US submarine arrives in the Southتصویر سوشل میڈیا

سیول: جنوبی کوریا نے شمالی کوریاپر الزام لگایا کہ ا س نے ا پنے مشرقی سمندر ی علاقہ میں دو بالسٹک میزائل داغے ہیں۔اس ضمن میں جنوبی کوریا کی فوج کی جانب سے جاری ایک بیان میں کہا گیا ہے کہ شمالی کوریا نے امریکی جوہری طاقت سے چلنے والی آبدوز کے جنوب میں واقع بحری اڈے پر پہنچنے کے چند گھنٹے بعد اپنے مشرقی سمندر میں دو بیلسٹک میزائل داغے۔ جنوبی کوریا کے جوائنٹ چیف آف اسٹاف کے مطابق شمالی کوریا نے یہ میزائل اپنے دارالحکومت پیانگ یانگ کے قریب واقع مقام سے نصف شب سے عین قبل داغے جوکہ گذشتہ ہفتے سے میزائل داغے جانے کا تیسرا واقعہ ہے۔

اے پی کی رپورٹ کے مطابق جزیرہ نما کوریا کے مشرقی ساحل کے پانیوں میں گرنے سے پہلے یہ بتایا گیا تھا کہ دونوں میزائلوں نے تقریباً 400 کلومیٹر (248 میل) کا فاصلہ طے کیا تھا۔ جاپان کی وزارت دفاع کے مطابق شمالی کوریا کی طرف سے جو دو بیلسٹک میزائل داغے گئے وہ دونوں اس کے خصوصی اقتصادی زون سے باہر گرے ۔یہ میزائل ایسے موقع پر داغے گئے ہیں جب جزیرہ نما کوریا میں زبردست کشیدگی ہے۔

جنوبی کوریا اور امریکہ امریکی اسٹریٹجک فوجی تنصیبات خطہ میں پہنچا کر شمالی کوریا کے ہتھیاروں کے پروگراموں کے خلاف اپنی عسکری تیاری کو بہتر بنانے کی جانب پیشرفت کررہے ہیں۔جس پر شمالی کوریا نے شدید ردعمل کا اظہار کرتے ہوئے کہا کہ اس قسم کے اثاثوں کی تعیناتی جوہری اسلحہ کے لیے مطلوبہ تقاضوں اور ضروریات کی تکمیل کر سکتی ہے۔امریکہ نے کہا ہے کہ وہ شمالی کوریا کے داغے گئے میزائلوں کو ناکارہ بنانے پر اپنے اتحادیوں کے ساتھ کام کر رہا ہے۔

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *