Pakistan Foreign Min Faces Backlash For 'disrespecting' Saudi Envoy; Netizens Reactتصویر سوشل میڈیا

کراچی: پاکستان کے وزرا اپنی حرکات کی وجہ سے اکثر سرخیوں میں رہتے ہیں۔ اس بار وزیر خارجہ شاہ محمود قریشی نے سعودی سفیر سے ملاقات کے دوران بدسلوکی کے بعد سوشل میڈیا پر لوگوں کے نشانے پر آگئے ہیں۔ اس بار پاکستان کے وزیر خارجہ قریشی کی اکڑ کسی دشمن ملک کے ساتھ نہیں بلکہ سعودی عرب کے ساتھ دیکھی گئی ہے جس نے اسے بہت بڑا قرض دیا تھا۔ اس کے بعد صارفین ان کے خلاف شدید غصہ نکال رہے ہیں۔

جیو نیوز کی رپورٹ کے مطابق سعودی عرب کے عوام نے منگل کو سعودی سفیر سے ملاقات کے دوران پاکستانی وزیر خارجہ کے ‘تضحیک آمیز’ انداز سے میٹنگ کرنے پربرہمی کا اظہار کیا ہے، وزیر خارجہ قریشی کی ایک تصویر سوشل میڈیا پر وائرل ہو رہی ہے۔ جس میں وہ پاکستان میں سعودی سفیر کے سامنے توہین آمیز انداز میں اکڑ کر بیٹھے نظر آرہے ہیں۔تصویر میں شاہ محمود قریشی نے سعودی سفیر کی طرف اپنا جوتا کیا ہوا ہے۔ وزیر کی اس بیہودگی پر سعودی عوام سخت ناراض ہیں، پاکستانیوں نے ٹویٹر پر اسے شرمندگی، توہین اور غیر اسلامی قرار دیا ہے۔

آئیسکو کے سابق ڈائریکٹر جنرل عبدالعزیز عثمان التویجری نے شاہ محمود قریشی کے اس انداز کو غیر اسلامی قرار دیا ہے۔ انہوں نے ٹویٹ کرتے ہوئے لکھا کہ ‘وزیر خارجہ کا سعودی سفیر کی طرف پاو¿ں دکھانا مکمل طور پر ناقابل قبول ہے ۔ ساتھ ہی ایک اور صارف نے لکھا کہ ہم تمام سعودی دوستوں سے معذرت خواہ ہیں کہ ہمارے وزیر خارجہ نے کچھ ایسا کیا ہے جو ناقابل قبول ہے۔ قابل غورہے کہ رواں سال نومبر میں عمران خان نے پاکستان کو مالی بحران سے نکالنے کے لیے سعودی عرب سے تین ارب ڈالر کا قرضہ لیا تھا۔

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *