Pakistan: One dead, several injured as police baton-charge MQM-P protesters in Karachiتصویر سوشل میڈیا

پشاور: پاکستانی صوبہ سندھ کے شہر کراچی میں متحدہ قومی موومنٹ پاکستان (ایم کیو ایم پی) کا یک کارکن ہلاک اور کئی دیگر بشمول خواتین اس وقت زخمی ہوگئیں جب پولس نے مظاہرین کو منتشر کرنے کے لیے ان پر لاٹھی چارج کیا اور دوڑا دوڑا کر مارا پیٹا۔ احتجاجی خواتین جمعہ کی رات 15 پولیس ہیلپ لائن سنٹر پر آتشزدگی کے بعد اپنے خاندان کے افراد کی گرفتاری کے خلاف احتجاج کر رہی تھیں۔

میڈیا رپورٹس کے مطابق ٹنڈو الہ یار پولیس نے ہفتے کے روز خواتین مظاہرین کو لاٹھیوں سے مارا جس پر متحدہ قومی موومنٹ پاکستان کی قیادت نے شدید تنقید کی۔ڈان کی رپورٹ کے مطابق وزیر اعلیٰ سندھ سید مراد علی شاہ نے بھی پولیس کی جانب سے خواتین کے خلاف طاقت کے استعمال کا نوٹس لیتے ہوئے ڈی آئی جی حیدر آباد پیر محمد شاہ کو تحقیقات کا حکم دیا۔ ڈان کی رپورٹ کے مطابق وزیراعلی سندھ سید مراد علی شاہ نے بھی پولیس کی جانب سے خواتین کے خلاف طاقت کے استعمال کا نوٹس لیا اور حیدرآباد کے ڈی آئی جی پیر محمد شاہ کو تحقیقات کا حکم دیا۔ ٹنڈو الہ یار پولیس نے بھولو خانزادہ قتل کیس کے مدعی آصف خانزادہ کے خلاف تین مقدمات درج کر لیے ہیں۔ٹنڈو الہ یار کے اے سیکشن تھانے میں متعدد افراد کے خلاف بھی مقدمہ درج کیا گیا ہے۔

پاکستانی میڈیا کا کہنا ہے کہ اس معاملے میں کئی مشتبہ افراد کو حراست میں لیا گیا ہے۔ ایم کیو ایم پی کے کارکن خلیل الرحمان عرف بھولو خانزادہ کو سیشن کورٹ کے گیٹ پر فائرنگ کر کے قتل کر دیا گیا۔ خانزادہ کی تدفین کے بعد جمعہ کی رات مشتعل افراد نے پولیس سینٹر کو آگ لگا دی۔ تھانے کے اندر موجود 10 کے قریب موٹر سائیکلوں اور ایک پرائیویٹ کار کو نذر آتش کر دیا گیا۔ پولیس حکام کے مطابق حملہ آور اس کی موٹر سائیکل کی چارجنگ اور واکی ٹاکی سیٹ سمیت کئی چیزیں لے گئے۔

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *