Senior officials among nine killed in Somalia car bombingsتصویر سوشل میڈیا

مغادیشو: پولس کے مطابق وسطی صومایہ میں دو کار بم دھماکے ہوئے جس میں کم از کم 9افراد بشمول علاقہ کے سینیر عہدیداران ہلاک ہو گے۔ الشباب نے ان دونوں بکار بم دھماکوں کی ذمہ داری قبول کر لی ہے۔دوسی جانب حکومت نے اس دہشت گرد تنظیم کے خلاف اپنی کارروائی میں شدت پیدا کر دی۔یہ دونوں کار بم دھماکے صومالیہ کے ایک بڑے حصے پر کنٹرول رکھنے والے القاعدہ سے وابستہ انتہاپسندوں کے خلاف حالیہ کارروائی کے مرکز بلیڈوین میں مقامی حکومتی دفاتر کے باہر چند منٹ کے وقفہ سے ہوئے۔

ایک مقامی پولس کمانڈر محمد معلم علی نے بتایا کہ ہمیں جو ابتدائی رپورٹ موصول ہوئی ہے اس میں 9افراد کی ہلاکت بتائی گئی ہے۔ انہوں نے کہا کہ ان دھماکوں میں ہرشابیلے ریاست کا وزیر صحت اور ایک ڈپٹی ڈسٹرکٹ کمشنر بھی شامل ہے۔ علی نے مزید کہا کہ جس شہر میں یہ خودکش دھماکے ہوئے وہ ہرشیلابیلے میں واقع ہیں اور ان دھماکوں میں 10 افراد زخمی بھی ہوئے ہیں۔

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *